میری باجی چلی گئی

ہمارا ارادہ 5 فروری تک دبئی میں رہنے کا تھا لیکن میرے اللہ کو کچھ اور ہی منظور تھا ۔ میری سب سے بڑی بہن جو مجھ سے ساڑھے 5 سال بڑی تھیں اور 1980ء میں والدہ محترمہ کے انتقال کے بعد میرا بہت خیال رکھتی تھیں وہ جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی رات اس دارِ فانی سے کوچ کر کے عالمِ برزخ میں چلی گئیں

اِنَّا لِلّٰہِ وَ اِنَّاۤ اِلَیۡہِ رٰجِعُوۡنَ

علِمِ دین کی حامل اور اس پر کاربند رہنے والی ۔ بطور ڈاکٹر ہر مریض کا درد محسوس کرنے والی اور اُن کا علاج ہی نہیں اُن کے لئے آنسو بہانے اور اللہ سے اُن کی شفاء مانگنے والی ۔ نادار لڑکیوں کی شادیوں کے پورے اخراجات اُٹھانے والی ۔ ہر کسی کا دِل میں درد رکھنے والی ۔ والدین ۔ سب بہن بھائیوں اور اپنی تعلقدار خواتین کے بچوں کو سویٹر بُن کے دینے والی ۔ میری پیاری باجی ہمیں درد میں چھوڑ کر چلی گئی ۔ اللہ سُبحانُہُ و تعالٰی میری پیاری باجی کی تمام نیکیاں قبول فرمائے اور اُسے جنت الفردوس میں اعلٰی مقام عطا فرمائے

قارئین سے التماس ہے کہ میری باجی کیلئے دعائے مغفرت کریں

اُن کی طبیعت خراب ہونے اور خصوصی نگہداشت کے کمرے میں داخل کئے جانے کی اطلاع ہمیں بھائیجان (بہنوئی) نے جمعہ کو رات ساڑھے آٹھ بجے دی اور دعا کیلئے کہا اس سے قبل وہ ہمیشہ ہمیں دلاسہ دیا کرتے تھے ۔ اس وجہ سے ہم پریشان ہو گئے اور سو نہ سکے ۔ اور بھاری دِلوں کے ساتھ اپنی پیاری باجی کی تندرستی کیلئے اللہ کے حضور دعائیں مانگنے لگے لیکن اُن کا سفر ختم ہو چکا تھا ۔ رات 12 بجے اُن کی رحلت کی اطلاع ملی ۔ میرے بیٹے نے بھاگ دوڑ کر کے اپنی والدہ ۔ اپنے اور میرے لئے نشستیں محفوظ کرا لیں اور ہم 11 بجے اسلام آباد اور پونے ایک بجے اُن کی رہائش واہ چھاؤنی پہنچ گئے

This entry was posted in آپ بيتی, پيغام, خبر on by .

About افتخار اجمل بھوپال

رہائش ۔ اسلام آباد ۔ پاکستان ۔ ۔ ۔ ریاست جموں کشمیر کے شہر جموں میں پیدا ہوا ۔ پاکستان بننے کے بعد ہجرت پر مجبور کئے گئے تو پاکستان آئے ۔انجنئرنگ کالج لاہور سے بی ایس سی انجنئرنگ پاس کی اور روزی کمانے میں لگ گیا۔ ملازمت کے دوران اللہ نے قومی اہمیت کے کئی منصوبے میرے ہاتھوں تکمیل کو پہنچائے اور کئی ملکوں کی سیر کرائی جہاں کے باشندوں کی عادات کے مطالعہ کا موقع ملا۔ روابط میں "میں جموں کشمیر میں" پر کلِک کر کے پڑھئے میرے اور ریاست جموں کشمیر کے متعلق حقائق جو پہلے آپ کے علم میں شائد ہی آئے ہوں گے ۔ ۔ ۔ دلچسپیاں ۔ مطالعہ ۔ مضمون نویسی ۔ خدمتِ انسانیت ۔ ویب گردی ۔ ۔ ۔ پسندیدہ کُتب ۔ بانگ درا ۔ ضرب کلِیم ۔ بال جبریل ۔ گلستان سعدی ۔ تاریخی کُتب ۔ دینی کتب ۔ سائنسی ریسرچ کی تحریریں ۔ مُہمْات کا حال

12 thoughts on “میری باجی چلی گئی

  1. Pingback: میری باجی چلی گئی « Jazba Radio

  2. Beenai

    انا للہ وانا الیہ راجعون
    اللہ آپ کی مر حومہ ہمشیرہ کی مغفرت فرما ئے انہیں جنت الفردوس میں مقام عطا فرمائے۔ آمین
    محتر مہ ہمشیرہ کے جو اوصا ف حمیدہ آپ نے بیان فرما ئے ان سے ظا ہر ہے کہ مر حومہ ایک نیک اور
    خداترس خاتون تھیں۔ اللہ ایسے لوگوں کو یقینی طور پر اپنے جوار رحمت میں جگہ دیتا ہے۔
    اللہ تعالی آپ کو بھی یہ صد مہ بر داشت کر نے کا صبر اور حوصلہ عطا فر ما ئے۔ آمین
    دعا گو ، بینائی

  3. سیما آفتاب

    انا للہ وانا الیہ راجعون ۔۔ اللہ مرحومہ کی مغفرت فرمائے اور ان کے درجات بلند فرمائے اور جملہ عزیز و اقارب کو صبر جمیل عطا فرمائے آمین!!

  4. عبدالرؤف

    انا للہ وانا الیہ راجعون
    اللہ سُبحانُہُ و تعالٰی مرحومہ کی تمام نیکیاں قبول فرمائے اور اُسے جنت الفردوس میں اعلٰی مقام عطا فرمائے- آمین

  5. wahaj d ahmad

    May Allah grant your baji a special place in Jannat-ul-Firdous and forgive all her mistakes and accept all her good deeds

  6. محمد سلیم

    انا للہ و انا الیہ راجعون –
    آپ کی عزیزہ کے انتقال کا سن کر افسوس ہوا۔ ان کے جو اوصاف حمیدہ آپ نے بتائے ہیں ایسے شخص کیلئے تو ایک عمر خضری درکار ہوتی ہے۔ مگر نظام کائنات ہی ایسا ہے کہ کسی کا اس کے سامنے کوئی زور نہیں۔ اللہ پاک آپ کو اور باقی سارے لواحقین کو صبر عطا فرمائیں اور مرحومہ کو اپنے ہاں اعلیٰ مقام عطا فرمائیں۔
    للهم اغفر للمؤمنين والمؤمنات المسلمين والمسلمات الاحياء منهم والاموات، انک سمیع مجیب الدعوات، یا رب العالمین۔ آمین

  7. شمیم

    محترم افتخار اجمل بھائ صاحب اسلام وعلیکم آپ کی ہمشیرہ صاحب کا پڑھ کر انتہائ دکھ ہوا انا للّٰہ واناالیہ راجعون اللہ تعالے انہیں اپنے جوار رحمت میں جگہ عطافرماے ۔اللہ سبحان تعالے اپنے نیک بندوں کو اپنی قربت میں رکھتا ہے اور جیسے آپ نے ان کی بے حد صفات بتائ ہیں تویقنا” اللہ ان کا شمار اپنے نیک بندوں میں کرے گا دعا ہے اللہ آپ کے سب اہل خانہ کو صبر وسکون دے اور آپکی ہمشیرہ کے درجات بلند کرے ان کی بخشش کرے آمین آپ کی بہن شمیم آپ کے دکھ میں برابر کی شریک ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

:wink: :twisted: :roll: :oops: :mrgreen: :lol: :idea: :evil: :cry: :arrow: :?: :-| :-x :-o :-P :-D :-? :) :( :!: 8-O 8)