غیرمطمئن قوم

انڈا ٹوٹنے کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ
اگر انڈا باہر سے لگائی گئی طاقت سے ٹوٹے تو ایک ممکنہ زندگی ضائع ہو جاتی ہے
اگر انڈا اندر سے لگائی گئی طاقت سے ٹوٹے تو ایک نئی زندگی شروع ہوتی ہے
یعنی صحتمند تبدیلی اندر سے جنم لیتی ہے

ہمارا یہ حال ہے کہ خود تو بدلتے نہیں ساری دنیا کو بدلنے کے نعرے لگاتے ہیں اور اسی بہانے سڑکوں اور چوراہوں پر کھڑے ہو کر جن کی بہتری کے دعوے کرتے ہیں اُنہی کیلئے زحمت کا سبب بنتے ہیں اور بعض اوقات اپنی طاقت کا غلط استعمال کرتے ہوئے املاک کو نقصان پہنچا کر عوام پر مالی بوجھ میں اضافے کا سبب بنتے ہیں

دوسری طرف ہمارا یہ حال ہے کہ کیسا بھی ماحول ہو ہم کبھی اس سے مطمئن یا خوش نہیں ہوتے یعنی روتے رہنا ہماری عادت بن چکی ہے
گیلپ انٹرنیشنل نے دنیا بھرمیں خوش رہنے والے ممالک کی فہرست جاری کی ہے ۔ 138 قوموں میں سے پہلی 10 خوش رہنے والی اقوام میں سے 9 کا تعلق لاطینی امریکا سے ہے ۔ متحدہ عرب امارات کا 15واں، کینیڈا کا 16واں، آسٹریلیا کا 18واں، دنیا میں سب سے زیادہ خوش سمجھے جانے والے امریکیوں کا 24واں اور چین کا 31 واں نمبر ہے اور پاکستان کا 117 نمبر ہے

یہ سوالات پوچھے گئے تھے کل دنیا کی بنیاد پر جتنوں نے ان سوالات کے جواب ہاں میں دیئے وہ سامنے لکھے ہیں
1 ۔ کیا کل آپ نے اپنے آپ کو آرام میں پایا ؟ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 72 فیصد
2 ۔ کیا کل آپ سے اچھا سلوک کیا گیا ؟ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 85 فیصد
3 ۔ کیا کل آپ نے کچھ سیکھا یا کوئی دلچسپ کام کیا ؟ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 43 فیصد
4 ۔ کیا ان چیزوں کا احساس آپ کو کل کے اکثر حصہ میں ہوا ؟ ۔ ۔ 73 فیصد
5 ۔ پُر لُطف کیا تھا ؟ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 72 فیصد

زندگی کی مثبت سوچ رکھنے والوں میں سرِ فہرست مندرجہ ذیل 10 ممالک ہیں
۔ ۔ نام ملک ۔ ۔ ۔ ۔ ہاں کہنے والے ۔ ۔ ۔ ۔ نام ملک ۔ ۔ ۔ ۔ ہاں کہنے والے ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ نام ملک ۔ ۔ ہاں کہنے والے
1 ۔ پاناما ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 85 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 2 ۔ پراگوئے ۔ ۔ ۔ ۔ 85 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 3 ۔ السالوے ڈور ۔ 84 فیصد
4 ۔ وینزولا ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 84 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 5 ۔ ترِینِیداد و توبَیگو ۔ ۔ ۔ 83 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 6 ۔ تھائی لینڈ ۔ ۔ ۔ ۔ 83 فیصد
7 ۔ گوآٹے مالا ۔ ۔ 82 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 8 ۔ فِلِیپِینز ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 82 فیصد ۔ ۔ ۔ ۔ 9 ۔ اِیکوے ڈور ۔ ۔ ۔ ۔ 81 فیصد
10 ۔ کوسٹا رِکا۔ ۔ 81 فیصد

پاکستان ۔ ۔ ۔ 36 فیصد

This entry was posted in روز و شب, طور طريقہ, قومی سانحات, معاشرہ on by .

About افتخار اجمل بھوپال

رہائش ۔ اسلام آباد ۔ پاکستان ۔ ۔ ۔ ریاست جموں کشمیر کے شہر جموں میں پیدا ہوا ۔ پاکستان بننے کے بعد ہجرت پر مجبور کئے گئے تو پاکستان آئے ۔انجنئرنگ کالج لاہور سے بی ایس سی انجنئرنگ پاس کی اور روزی کمانے میں لگ گیا۔ ملازمت کے دوران اللہ نے قومی اہمیت کے کئی منصوبے میرے ہاتھوں تکمیل کو پہنچائے اور کئی ملکوں کی سیر کرائی جہاں کے باشندوں کی عادات کے مطالعہ کا موقع ملا۔ روابط میں "میں جموں کشمیر میں" پر کلِک کر کے پڑھئے میرے اور ریاست جموں کشمیر کے متعلق حقائق جو پہلے آپ کے علم میں شائد ہی آئے ہوں گے ۔ ۔ ۔ دلچسپیاں ۔ مطالعہ ۔ مضمون نویسی ۔ خدمتِ انسانیت ۔ ویب گردی ۔ ۔ ۔ پسندیدہ کُتب ۔ بانگ درا ۔ ضرب کلِیم ۔ بال جبریل ۔ گلستان سعدی ۔ تاریخی کُتب ۔ دینی کتب ۔ سائنسی ریسرچ کی تحریریں ۔ مُہمْات کا حال

2 thoughts on “غیرمطمئن قوم

  1. Seema Aftab

    بالکل درست بات ہے ۔۔۔ وجہ کوئی بھی ہو ہم لوگ قنوطیت پسند ہو گئے ہیں

    شئیر کرنے کا شکریہ :)

  2. Azeem Javed

    منفی باتیں یوں اُبل اُبل کے ہمارے ہاں سامنے آتی ہیں کہ مثبت خیالات اور سوچوں کا پنپنا بہت مشکل ہوگیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

:wink: :twisted: :roll: :oops: :mrgreen: :lol: :idea: :evil: :cry: :arrow: :?: :-| :-x :-o :-P :-D :-? :) :( :!: 8-O 8)