آنکھ اور دُور بِین

103 بار دیکھا گیا

انسان کی آنکھ 10 لاکھ رنگوں میں فرق کر سکتی ہے
اور
دنیا میں موجود بڑی سے بڑی دُور بِین سے زیادہ معلومات لے سکتی ہے

انسان کی قوتِ سماع اتنی حساس ہے کہ لاکھوں قسم کی آوازوں کا فرق جان جانتی ہے

پس (اے انسانو اور جِنو) تم اپنے پروردگار کی کس کس نعمت کو جھٹلاؤ گے ؟

This entry was posted in دین, معلومات on by .

About افتخار اجمل بھوپال

رہائش ۔ اسلام آباد ۔ پاکستان ۔ ۔ ۔ ریاست جموں کشمیر کے شہر جموں میں پیدا ہوا ۔ پاکستان بننے کے بعد ہجرت پر مجبور کئے گئے تو پاکستان آئے ۔انجنئرنگ کالج لاہور سے بی ایس سی انجنئرنگ پاس کی اور روزی کمانے میں لگ گیا۔ ملازمت کے دوران اللہ نے قومی اہمیت کے کئی منصوبے میرے ہاتھوں تکمیل کو پہنچائے اور کئی ملکوں کی سیر کرائی جہاں کے باشندوں کی عادات کے مطالعہ کا موقع ملا۔ روابط میں "میں جموں کشمیر میں" پر کلِک کر کے پڑھئے میرے اور ریاست جموں کشمیر کے متعلق حقائق جو پہلے آپ کے علم میں شائد ہی آئے ہوں گے ۔ ۔ ۔ دلچسپیاں ۔ مطالعہ ۔ مضمون نویسی ۔ خدمتِ انسانیت ۔ ویب گردی ۔ ۔ ۔ پسندیدہ کُتب ۔ بانگ درا ۔ ضرب کلِیم ۔ بال جبریل ۔ گلستان سعدی ۔ تاریخی کُتب ۔ دینی کتب ۔ سائنسی ریسرچ کی تحریریں ۔ مُہمْات کا حال

2 thoughts on “آنکھ اور دُور بِین

  1. سیما آفتاب

    ایک جگہ پڑھا تھا

    صرف ایک دن کے لئے اپنے سب کام آنکھیں بند کر کے ، اندھوں کی طرح کرو ذرا ۔ ۔ بنو ہاں ذرا ایک دن کے لئے بہرے ۔۔۔ بند کرو اپنے کانوں کو روئی سے ۔ ۔ ۔ چلو ہاں ذرا آؤ جاؤ صرف ایک ٹانگ پر دن بھر ۔ ۔ چلو وہیل چیئر پر ہی گزارو سارا دن ۔ ۔ ۔ پورا دن بیڈ پر ایک ہی پوزیشن پر لیٹ کر تو گزارو ۔ ۔ کرو نا سب کام ذرا ہاتھوں کو استعمال کیے بغیر ۔ ۔ بنو ناں ذرا ایک دن کے لئے ہی گونگے اور سمجھاؤ سب کو اشاروں سے ۔ ۔ صرف ایک دن کے لئے بس ۔ ۔یا چلو آدھے دن کے لئے ہی سہی ۔ کر کے دیکھو ایسا سب ذرا ۔ ۔ ۔شاید تب تمہیں احساس ہو کہ تم پر کتنی رحمتیں کرم اور آسانیاں ہیں ۔ ۔ شاید تب تم سب بھول سکو اپنی ناکامی ، ہار ، کھو دینے کا رونا ، اداسی ، غم ، درد وغیرہ وغیرہ
    چپ ہو جاؤ پلیز ۔ ۔ خاموش رہو اب
    بند کرو شکوے ، شکایتیں ۔ خود پر ترس بے نیاز بن جاؤ ۔ ۔
    ہر حال میں “شکر گزار” بن جاؤ
    بس سمجھ جاؤ . . .
    سنور جاؤ ۔

    لاَ يُكَلِّفُ اللّهُ نَفْساً إِلاَّ وُسْعَهَا لَهَا مَا كَسَبَتْ وَعَلَيْهَا مَا اكْتَسَبَت •

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

:wink: :twisted: :roll: :oops: :mrgreen: :lol: :idea: :evil: :cry: :arrow: :?: :-| :-x :-o :-P :-D :-? :) :( :!: 8-O 8)