کیا وہ عقل سے فارغ ہیں ؟

176 بار دیکھا گیا

دوسروں کو بیوقوف کہنے سے کوئی عقلمند نہیں بن سکتا اسلئے ہمیں دوسروں کو بیوقوف سمجھنے کی بجائے اپنی عقل کی خبر گیری کرنا چاہیئے کہ وہ درست پروان چڑھے اور درست سمت میں چلے

ہمارے ہموطن عام طور پر عربوں کو بیوقوف یا جاہل گردانتے ہں اور اِس کا برملا اظہار بھی کرتے ہیں
میرا تجربہ اور مشاہد یہ ہے کہ عرب بیوقوف نہیں ہوتے البتہ وہ اپنی لیاقت جتانے کی کوشش نہیں کرتے ۔ میں نے کئی عرب دیکھے جو انکساری اور کم عِلمی کا اظہار کرتے تھے بعد میں معلوم ہوا کہ وہ اچھے خاصے تعلیم یافتہ تھے

میرا 2 ممالک کے عربوں کے ساتھ کافی تعلق رہا ہے ۔ سعودی فوج کے نئے انجیئرز کی پاکستان میں تربیت میرے ذمہ رہی اس کے بعد سعودی عرب میں میری رہائش 5 بار مختلف دورانیوں کیلئے رہی ۔ اس کے علاوہ لبیا میں میری رہائش پونے 7 سال رہی جہاں مجھے حکومتِ پاکستان نے لبیا کی حکومت کے ایڈوائزر اور لبیا میں موجود تمام پاکستانیوں کیلئے پاکستان اور لبیا کے مابین آنریری چیف کوآرڈینیٹر کے طور پر بھیجا تھا ۔

میرے عِلم میں ایک ایسا واقعہ ہے جس نے ثابت کر دیا تھا کہ عربوں کو بیوقوف سمجنے اور کہنے والا میرا پاکستانی بھائی دراصل خود بیوقوف نکلا
لبیا کے دارالحکومت طرابلس میں ایک ہموطن سے جان پہچان ہو گئی جو گریجوئیٹ تھا اور ایک وکالہ (Agency) میں کام کرتا تھا جو یورپ سے اشیاء درآمد کرتے تھے ۔ کبھی کبھی اُس کے دفتر کے سامنے سے گذرتے ہوئے علیک سلیک ہو جاتی ۔ وکالہ کے مالک سے بھی جان پہچان ہو گئی ۔ چند سال بعد وہ پاکستانی لبیا سے چلا گیا ۔ ایک دِن میں اُس وکالہ کے سامنے سے گذر رہا تھا تو وکالہ کا مالک ملا اور سلام کے بعد بولا ” آؤ بیٹھو چائے پیو ۔ میں نے تم سے کچھ بات بھی کرنا ہے“۔ میں چلا گیا ۔ جب چائے پی چکے تو اُس نے مجھے ایک خط پڑھنے کیلئے دیا جو اُس پاکستانی نے بھیجا تھا ۔ اُس انگریزی میں لکھے خط میں اہم باتیں یہ لکھی تھیں

میں یہاں نوکر نہیں ہوں بلکہ تمہاری سے بڑی کمپنی کا مالک ہوں
تم لیبی لوگ تو پرلے درجے کے بیوقوف ہو
میں over-invoicing کرتا رہا اور سامان بھیجنے والے اٹلی میں میرے اکاؤنٹ میں رقمیں جمع کراتے رہے
اس طرح جب میں لکھ پتی بن گیا تو تمہیں روتا چھوڑ کر اٹلی آ گیا

اس خط کا ایک ایک لفظ میرے دِل میں خنجر اور دماغ پر ہتھوڑے مارتا رہا ۔ جب میں خط پڑھ چُکا تو مجھ میں بولنے کی بھی سکت نہیں تھی ۔ وکالہ کا مالک بولا ” تم بھی پاکستانی ہو ۔ بتاؤ کیا یہ خط بھیج کر اُس نے عقلمندی کی ہے ؟ کیا اُس نے ساری پاکستانی قوم کو نقصان نہیں پہنچایا ؟“

اب سُنیئے کہ عرب کتنے بیوقوف ہوتے ہیں
لبیا میں ایک پروجیکٹ لگانے کیلئے یورپ کی ایک بہت بڑی کمپنی سے مذاکرات ہو رہے تھے ۔ کمپنی نے اپنا ایک ایکسپرٹ بُلوایا ۔ شام کو ایکسپرٹ پہنچا اور اُسی رات اُسے ہوٹل سے پکڑ کر ڈی پورٹ کر دیا گیا ۔ ہوا یوں کہ لبیا اور اُس کمپنی کا معاہدہ تھا کہ کوئی اسرائیلی یا جو شخص اسرائیل گیا ہو وہ لبیا نہیں آئے گا ۔ اُس ایکسپرٹ نے انجنیئرنگ میں گریجوئیشن اسرائیل میں کی تھی یعنی 4 سال وہاں رہا تھا ۔ یہ بات یورپی کمپنی کے سربراہان کے عِلم میں نہ تھی لیکن لبیا کی انٹیلیجنس سروس نے ایکسپرٹ کے لبیا میں داخل ہونے کے بعد چند گھنٹوں میں معلوم کر لی

میرے ہموطنوں کی غلط سوچ اور عربوں کی سُوجھ بُوجھ کے متعدد واقعات کا تجربہ یا مشاہدہ ہوا ۔ اختصار کی خاطر صرف ایک ایک رقم کیا ہے

This entry was posted in روز و شب, طور طريقہ, معاشرہ, معلومات on by .

About افتخار اجمل بھوپال

رہائش ۔ اسلام آباد ۔ پاکستان ۔ ۔ ۔ ریاست جموں کشمیر کے شہر جموں میں پیدا ہوا ۔ پاکستان بننے کے بعد ہجرت پر مجبور کئے گئے تو پاکستان آئے ۔انجنئرنگ کالج لاہور سے بی ایس سی انجنئرنگ پاس کی اور روزی کمانے میں لگ گیا۔ ملازمت کے دوران اللہ نے قومی اہمیت کے کئی منصوبے میرے ہاتھوں تکمیل کو پہنچائے اور کئی ملکوں کی سیر کرائی جہاں کے باشندوں کی عادات کے مطالعہ کا موقع ملا۔ روابط میں "میں جموں کشمیر میں" پر کلِک کر کے پڑھئے میرے اور ریاست جموں کشمیر کے متعلق حقائق جو پہلے آپ کے علم میں شائد ہی آئے ہوں گے ۔ ۔ ۔ دلچسپیاں ۔ مطالعہ ۔ مضمون نویسی ۔ خدمتِ انسانیت ۔ ویب گردی ۔ ۔ ۔ پسندیدہ کُتب ۔ بانگ درا ۔ ضرب کلِیم ۔ بال جبریل ۔ گلستان سعدی ۔ تاریخی کُتب ۔ دینی کتب ۔ سائنسی ریسرچ کی تحریریں ۔ مُہمْات کا حال

One thought on “کیا وہ عقل سے فارغ ہیں ؟

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

:wink: :twisted: :roll: :oops: :mrgreen: :lol: :idea: :evil: :cry: :arrow: :?: :-| :-x :-o :-P :-D :-? :) :( :!: 8-O 8)