راس الخیمہ ۔ ساحلِ سمندر

دبئی پہنچنے پر بیٹے نے 2 خبریں سنائیں ۔ ایک کہ 5 جولائی سے 8 جولائی تک راس الخیمہ ھِلٹن سِی ریزارٹ میں 2 فیملی رومز محفوظ کرائے ہوئے ہیں ۔ 4 دن وہاں رہیں گے ۔ دوسرا کہ جس اپارٹمنٹ میں رہ رہے ہیں اسے مالک بیچنا چاہتا ہے اسلئے رمضان شروع ہونے سے قبل نئی جگہ تلاش کرنا ہے اور پسند کی جگہ ملنا خاصہ مُشکل ہے ۔ دوسری خبر اچھی نہ تھی مگر مجبوری کا نام شکریہ ۔ خیر ہم راس الخیمہ گئے اور خوب لُطف اندوز ہوئے ۔ سارے اپارٹمنٹ سمندر کے کنارے پر تھے ۔ میں اور بیگم شام کو تھوڑی دیر کیلئے سمندر کے کنارے جاتے ۔ اُس وقت بھی کافی گرمی ہوتی ۔ بچہ لوگ شام کو زیادہ دیر سمندر کے کنارے رہتے ۔ خاص کر ابراھیم (میرا پوتا) خوش تھا ۔ پوتی جو اس وقت 3 ماہ کی تھی خوش نہیں تھی ۔ ناشتہ اور کھانا اچھا تھا اور ہر ایک کو اپنی پسند کے مطابق مل جاتا تھا ۔ یہ رہیں راس الخیمہ ھِلٹن ریزارٹ کی کچھ نشانیاں

اپارٹمنٹس کا ماتھا ۔ نچلی منزل میں دو جُڑے ہوئے فیملی رومز ہیں جن میں ہم لوگ رہے ۔ داخل ہونے کیلئے دروازے داہنی اور بائیں اطراف میں ہیں

اپارٹمنٹس کی پُشت سمندر کی طرف سے

سونے کا ایک کمرہ ۔ ایسے دو کمرے تھے ۔ ایک بستر پر ابراھیم بیٹھا ہے

اپارٹمنٹ کے پچھلے برآمدے میں کھڑے ہو کر سمندر کا نظارہ

سمندر کے کنارے میرا بیٹا ۔ بیگم اور پوتا کرسیوں پر بیٹھے ہیں ۔ پوتا دادی کو کمرے سے گھسیٹ کر لے گیا تھا کہ میرے ساتھ بیٹھیں

ھِلٹن ریزارٹ کی مرکزی عمارت جہاں کھانے ۔ نماز اور کھیلوں وغیرہ کا بندوبست تھا

This entry was posted in آپ بيتی, روز و شب on by .

About افتخار اجمل بھوپال

رہائش ۔ اسلام آباد ۔ پاکستان ۔ ۔ ۔ ریاست جموں کشمیر کے شہر جموں میں پیدا ہوا ۔ پاکستان بننے کے بعد ہجرت پر مجبور کئے گئے تو پاکستان آئے ۔انجنئرنگ کالج لاہور سے بی ایس سی انجنئرنگ پاس کی اور روزی کمانے میں لگ گیا۔ ملازمت کے دوران اللہ نے قومی اہمیت کے کئی منصوبے میرے ہاتھوں تکمیل کو پہنچائے اور کئی ملکوں کی سیر کرائی جہاں کے باشندوں کی عادات کے مطالعہ کا موقع ملا۔ روابط میں "میں جموں کشمیر میں" پر کلِک کر کے پڑھئے میرے اور ریاست جموں کشمیر کے متعلق حقائق جو پہلے آپ کے علم میں شائد ہی آئے ہوں گے ۔ ۔ ۔ دلچسپیاں ۔ مطالعہ ۔ مضمون نویسی ۔ خدمتِ انسانیت ۔ ویب گردی ۔ ۔ ۔ پسندیدہ کُتب ۔ بانگ درا ۔ ضرب کلِیم ۔ بال جبریل ۔ گلستان سعدی ۔ تاریخی کُتب ۔ دینی کتب ۔ سائنسی ریسرچ کی تحریریں ۔ مُہمْات کا حال

3 thoughts on “راس الخیمہ ۔ ساحلِ سمندر

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

:wink: :twisted: :roll: :oops: :mrgreen: :lol: :idea: :evil: :cry: :arrow: :?: :-| :-x :-o :-P :-D :-? :) :( :!: 8-O 8)